آئی سی سی ایوارڈز، اسٹوکس سال کے بہترین کرکٹر

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل(آئی سی سی) نے 2019 کے سالانہ ایوارڈز کا اعلان کردیا اور انگلینڈ کو عالمی چیمپیئن بنوانے والے مایہ ناز انگلش آل راﺅنڈر بین اسٹوکس کو مینز کرکٹر آف دی ایئر ایوارڈ دیا گیا۔

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل نے گزشتہ ایک سال کے دوران بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے کرکٹرز کو ایوارڈ دے کر عمدہ کارکردگی کا انعام دے دیا۔

ورلڈکپ میں انگلینڈ کو عالمی چیمپیئن بنوانے میں اہم کردار ادا کرنے والے بین اسٹوکس کو آئی سی سی مینز کرکٹر آف دی ایئر کی سرگیری سوبرز ٹرافی دی گئی۔

بھارتی بلے باز روہت شرما کو ون ڈے کرکٹ کا بہترین بلے باز قرار دیا گیا ہے، انہوں نے 2019 میں 28 ون ڈے میچوں میں 57.30 کی اوسط سے 1490 رنز بنائے۔

آسٹریلین فاسٹ باﺅلر پیٹ کمنز کو بہترین ٹیسٹ باﺅلر کے اعزاز سے نوازا گیا ہے، انہوں نے مجموعی طور پر 59 وکٹیں اپنے نام کیں۔

تاہم آئی سی سی ایوارڈز میں ایک مرتبہ پھر بھارتی اجارہ داری کی جھلک نظر آئی اور اسپرٹ آف دی کرکٹر کا ایوارڈ بھارتی کرکٹ ٹیم کے کپتان ویرات کوہلی کے نام رہا۔

گزشتہ سال نیوزی لینڈ نے پورے سال کین ولیمسن کی زیر قیادت بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا اور ورلڈ کپ فائنل میچ ٹائی ہونے کے باوجود شکست خوردہ ٹیم قرار دیے جانے کے باوجود ولیمسن اور ان کی ٹیم کا ڈسپلن دیدنی تھا لیکن اس بہترین نظم و ضبط کے باوجود انہیں اسپرٹ آف کرکٹ کا ایوارڈ نہیں دیا گیا۔

پاکستان کا کوئی بھی کھلاڑی ایوارڈ حاصل کرنے میں تو کامیابی نہیں ہو سکا لیکن تاہم پاکستان کی ٹی20 ٹیم کے کپتان بابر اعظم آئی سی سی کی بہترین ون ڈے ٹیم میں جگہ بنانے میں کامیابی ہوگئے ہیں۔

ویرات کوہلی کو آئی سی سی کی بہترین ون ڈے ٹیم کا کپتان بنایا گیا ہے البتہ ٹیسٹ ٹیم میں کسی پاکستانی کو شامل نہیں کیا گیا۔

بھارت کے دیپک چہار کو ٹی20 پرفارمر آف دی ائیر جبکہ مارنس لبوشین کو ایمرجنگ کرکٹر آف دی ایئر ایوارڈ کا مستحق ٹھہرایا گیا ہے۔

رچرڈ ایلنگ ورتھ کو بہترین امپائر آف دی ایئر کا ایوارڈ دیا گیا ہے۔

بہترین ایسوسی ایٹ کرکٹر کا ایوارڈ اسکاٹ لینڈ کے کائل کوئٹزر کو دیا گیا۔

x

Check Also

اسد شفیق کے نام سے جعلی سوشل میڈیا اکاؤنٹ پر فنڈ ریزنگ کا انکشاف

اسد شفیق کے نام سے جعلی سوشل میڈیا اکاؤنٹ پر فنڈ ریزنگ کا انکشاف

ٹیسٹ کرکٹر اسد شفیق کے نام سے جعلی سوشل میڈیا اکاؤنٹ سے فنڈریزنگ ہونے کا ...

%d bloggers like this: