سی آئی اے، یہودی لابی، را ایجنٹ : ملالہ سے متعلق جھوٹی خبریں

سی آئی اے، را اور یہودی لابی سب نے ملالہ کو اپنا ایجنٹ بنالیا ہے، اگر پاکستانی سوشل میڈیا کا یقین کرلیا جائے تو یہی سچ ہے۔

مفتی محمد زبیر نے گفتگو کرتے ہوئے کسی بھی شخص پر بے بنیاد اور جھوٹا الزام لگانے کو غیر اسلامی اور شریعت کیخلاف قرار دیا، ان کا کہنا تھا کہ کسی پر جھوٹا الزام لگانا اور ایسی بات اور عمل منصوب کرنا جو اس نے کہا اور نہ ہی کیا ہو سراسر نا انصافی ہے۔

پروگرام کے ایک اور مہمان سوشل میڈیا کارکن فرنود عالم کہتے ہیں کہ میڈیا نے ملالہ کی کتاب کے الفاظ کو سیاق و سباق سے ہٹ کر پیش کیا جبکہ سوشل میڈیا پر پروپیگنڈا کیا گیا۔ وہ بولے کہ سوشل میڈیا پر مواد شیئر نہیں کرنا چاہئے لیکن وہاں اپنے مطلب کا مواد شیئر کیا گیا۔

جماعت اسلامی کے رہنماء حافظ نعیم الرحمان کہتے ہیں کہ کچھ تو ضرور ہوگا کہ ملالہ پر اتنی تنقید کی جارہی ہے، ہم نے امریکی غلامی کے باعث سوات میں کافی افراتفری دیکھی، جس کے باعث تقریباً 38 لاکھ افراد کو اپنا گھر بار چھوڑنا پڑا۔

انہوں نے سوالات اٹھائے کہ ملالہ کو نوبل انعام کیوں دیا گیا؟، ڈاکٹر ادیب رضوی (ایس آئی یو ٹی سربراہ) کو کیوں نوبل انعام سے نہیں نوازا گیا؟۔

سماء کی تحقیقات میں سوشل میڈیا پر جاری تصویر پر تبصرے غیر حقیقی اور ناقص معلومات پر مبنی نکلے، ملالہ یوسف زئی ایک تصویر میں غیر ملکی شخص کے ساتھ نظر آرہی ہیں جنہیں کچھ لوگوں نے سلمان رشدی قرار دیا تاہم وہ جرمن سیاستدان اور پارلیمنٹیرین مارٹن شولز ہیں، جنہوں نے ملالہ کو یورپی ایوارڈ سے نوازا تھا

Leave a Reply

Your email address will not be published.

x

Check Also

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک یوٹیوبر کو گرفتار کرلیا۔ ملزم مذاق کے نام پر خواتین کو مختلف باتوں پر ہراساں کرتا تھا اور گزشتہ کئی دنوں سے سوشل میڈیا پر اس پر خوب تنقید کی جارہی تھی اور پولیس سے ایکشن لینے کا مطالبہ کیا جارہا تھا۔ ملزم پر خواتین سے غیراخلاقی حرکات ، اسلحہ کے زورپرگالم گلوچ کرنے کے الزام میں مقدمہ درج کرلیاگیا ہے۔ گوجرانوالہ پولیس نے لاہور کے علاقے محمود بوٹی میں کارروائی کرکے ملزم محمد علی کو گرفتار کرلیا۔ ملزم گکھڑ منڈی کا رہائشی ہے جس نے سوشل میڈیاپر اپنا چینل بنارکھا ہے ۔ ایس پی صدر عبدالوہاب کےمطابق ملزم مزاحیہ ویڈیوز کے ذریعے شہرت حاصل کرنے کے لیے مختلف عوامی مقامات اور پارکس میں بیٹھی خواتین کو ہراساں کرکے ان کی تذلیل کرتا اور ویڈیو سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کردیتا تھا۔ پولیس نے ملزم کے خلاف مقامی شہری کی مدعیت میں مقدمہ درج کرکے کارروائی شروع کردی ہے۔

مزاحیہ ویڈیو کے نام پر خواتین کو ہراساں کرنے والا یوٹیوبر گرفتار

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک ...

%d bloggers like this: