سندھ حکومت کیلئے ڈھائی لاکھ سرنجوں کی امداد

امریکی ادارہ برائے بین الاقوامی امداد (USAID) بچوں میں ٹائی فائیڈ کے خلاف سندھ حکومت کی مہم میں ڈھائی لاکھ سرنجیں فراہم کرکے تعاون کررہا ہے۔

سندھ کے محکمہ صحت نے دواؤں کے خلاف مزاحمت والے ٹائی فائیڈ کے شکار بچوں کی بڑھتی ہوئی تعداد کے پیش نظر یو ایس ایڈ سے تعاون کی درخواست کی تھی ۔

یو ایس ایڈ کی جانب سے فراہم کی جانے والی سرنجیں حیدرآباد سندھ کے علاقوں لطیف آباد اور قاسم آباد میں دواؤں کے خلاف مزاحمت والے ٹائی فائیڈ کی وباء کے خلاف ڈھائی لاکھ بچوں کو حفاظتی ٹیکے لگانے میں مدد دیں گی۔

یوایس ایڈ کے قائم مقام ڈپٹی مشن ڈائریکٹر برائے سندھ و بلوچستان اوگیل اوڈو کا کہنا تھا کہ ’’حکومت سندھ کی انسداد ٹائیفائیڈ مہم میں ہمارا تعاون ہماری مضبوط شراکت کا عکاس ہے۔

یو ایس ایڈ سندھ حکومت کی صحت عامہ کے لیے نتائج پر مبنی کوششوں کی حمایت جاری رکھے گا۔امریکی حکومت یو ایس ایڈ کے ذریعے 5 سال سے سندھ حکومت کی مدد کررہی ہے تاکہ صحت کی بنیادی سہولتوں تک رسائی کے ذریعے بچوں کی زندگیاں بچائی جاسکیں۔

یو ایس ایڈ اپنے آغاز سے ہی لوگوں کی زندگیاں بچانے، خاندان اور برادریوں کو مضبوط کرنے اور صحت مند افرادی قوت تشکیل دینے کے لیے حکومت پاکستان سے تعاون کررہا ہے۔ صرف گزشتہ 5 سال میں یوایس ایڈ نے پاکستان میں 94 لاکھ خواتین اور بچوں کو زچہ و بچہ اور تولیدی صحت کی جان بچانے والی طبی سہولتیں فراہم کی ہے۔

نتائج پر مبنی طبی سہولتوں کے لیے 50 ہزار افراد کو تربیت دی گئی ہے اور خواتین کی خاندانی منصوبہ بندی کی ضروریات پوری کرنے کے لیے سندھ، پنجاب، خیبرپختونخوا اور بلوچستان حکومت کی مدد کی ہے

Leave a Reply

Your email address will not be published.

x

Check Also

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک یوٹیوبر کو گرفتار کرلیا۔ ملزم مذاق کے نام پر خواتین کو مختلف باتوں پر ہراساں کرتا تھا اور گزشتہ کئی دنوں سے سوشل میڈیا پر اس پر خوب تنقید کی جارہی تھی اور پولیس سے ایکشن لینے کا مطالبہ کیا جارہا تھا۔ ملزم پر خواتین سے غیراخلاقی حرکات ، اسلحہ کے زورپرگالم گلوچ کرنے کے الزام میں مقدمہ درج کرلیاگیا ہے۔ گوجرانوالہ پولیس نے لاہور کے علاقے محمود بوٹی میں کارروائی کرکے ملزم محمد علی کو گرفتار کرلیا۔ ملزم گکھڑ منڈی کا رہائشی ہے جس نے سوشل میڈیاپر اپنا چینل بنارکھا ہے ۔ ایس پی صدر عبدالوہاب کےمطابق ملزم مزاحیہ ویڈیوز کے ذریعے شہرت حاصل کرنے کے لیے مختلف عوامی مقامات اور پارکس میں بیٹھی خواتین کو ہراساں کرکے ان کی تذلیل کرتا اور ویڈیو سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کردیتا تھا۔ پولیس نے ملزم کے خلاف مقامی شہری کی مدعیت میں مقدمہ درج کرکے کارروائی شروع کردی ہے۔

مزاحیہ ویڈیو کے نام پر خواتین کو ہراساں کرنے والا یوٹیوبر گرفتار

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک ...

%d bloggers like this: