جب بھی علماء نے تحریک چلائی مارشل لا لگا

جب بھی علماء نے تحریک چلائی مارشل لا لگا

وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے ایک بار پھر دعویٰ کیا ہے کہ مولانا فضل الرحمان اسلام آباد نہیں آئیں گے کیونکہ یہ بہت ہی نازک وقت ہے اور دھرنا ابھی گرے لسٹ میں ہے۔

لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے شیخ رشید کا کہنا تھا کہ مولانا امریکا کو کہتے تھے مجھے لاؤ، قوم ابھی وہ نہیں بھولی جب مولانا امریکی سفیر کو کہتے تھے کہ مجھے وزیراعظم بناؤ۔

شیخ رشید نے کہا کہ فضل الرحمان نے الیکشن کے بائیکاٹ کا اعلان کیا تھا اور پھر الیکشن میں کود پڑے تھے، انہوں نے پہلے بے نظیر کو بھی سیاسی مقاصد کے لیے استعمال کیا۔

انہوں نے کہا کہ سیاست میں وقت  بہت زیادہ اہمیت کا حامل ہوتا ہے اور دھرنا ابھی تک دھندلا ہوا ہے، مولانا اسلام آباد نہیں آئیں گے اور انہیں فیس سیونگ دی جا سکتی ہے۔

جنرل قمر جاوید اور عمران خان ایک ہی گاڑی کے دو پہیے ہیں: شیخ رشید 

ان کا کہنا ہے کہ دینی مدرسے ہمارے ماتھے کے جھومر ہیں اور مجھے فضل الرحمان سے زیادہ دینی مدارس کی فکر ہے۔

وزیر ریلوے نے مزید کہا کہ ہمارے دینی مدرسے پہلے ہی مغربی میڈیا کی زد میں ہیں، مولانا ڈنڈا برداروں کو ایسے دکھا رہے ہیں جیسے دہشت گرد تیار ہو رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مدرسے دین کے مینار ہیں اور میں ان کے ساتھ کھڑا ہوں، مولانا اسلام آباد کی دھوپ میں دین کی قوتوں کو خراب نہ کریں۔

ان کا کہنا تھا کہ جب ن لیگ والے ختم نبوت ﷺ کا قانون لا رہے تھے تو فضل الرحمان بھی ان کے ساتھ تھے۔

وزیر ریلوے نے دھرنے والوں کو خبردار کیا کہ نیشنل ایکشن پلان ان ایکشن ہے، جو یہ سمجھتا ہےکہ اسلام آباد پر چڑھائی کرنے سے مسائل حل ہو جائیں گے وہ عقل کا اندھا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پہلی مرتبہ پاکستان میں خوشگوار حالات ہیں، جنرل قمر جاوید باجوہ اور عمران خان ایک ہی گاڑی کے دو پہیے ہیں۔

اس بار جمہوریت کو شب خون لگا تو 400 سے 600 لوگ اندر ہوں گے: وزیر ریلوے

وزیر ریلوے نے کہا کہ اس وقت جو ملکی سلامتی کے بارے میں فکرمند ہیں وہ سیاسی خلفشار پر بھی فکر مند ہیں، وہ سمجھانے کی کوشش کر رہے ہیں کہ جیسی تیسی معیشت ہے ملک کو چلنے دیں۔

جے یو آئی (ف) کے دھرنے کے حوالے سے بات کرتے ہوئے شیخ رشید نے کہا کہ مولانا فضل الرحمان کا دھرنا اب بھی گرے لسٹ میں ہے،  جب بھی علماء نے تحریک چلائی تو مارشل لا لگا، اس بار جمہوریت کو شب خون لگا تو فیصلے جلدی ہوں گے اور 400 سے 600 لوگ اندر ہوں گے۔

انہوں نے کہا کہ سارے سیاسی چوہدری مر بھی جائیں تو فضل الرحمان کو اقتدار نہیں ملے گا، مولانا جن کے اشارے پر سیاست کھیل رہے ہیں ان کی سیاست بھی تباہ ہو گی۔

شیخ رشید نے کہا کہ سارے سیاستدان ایک این آر او کی مار ہیں لیکن عمران خان کسی صورت این آر او نہیں دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ معاملات 21 سے 26 تک بہتر ہو جائیں گے، معاملات بہتر نہ ہوئے تو ذمے دار نواز شریف اینڈ کمپنی ہو گی۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ یہ بات ٹھیک ہے کہ مہنگائی بڑھنے کی وجہ ہم ہیں لیکن اس کے ذمے دار شریف برادران اور آصف زرداری ہیں۔

سیاسی مخالفین کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے شیخ رشید نے کہا کہ نواز شریف، شہباز شریف اور آصف زرداری نے ملک کو بے دردی سے لوٹا، ان لوگوں نے ملک کو صرف لوٹا نہیں بلکہ نوچا ہے۔

x

Check Also

آرمی چیف کی دوسری مدت سے دو دن پہلے فوج میں اہم تبدیلیاں

بری فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ نے اپنے دوسرے دور ملازمت شروع ہونے ...

%d bloggers like this: