گٹکا کھانے سے یومیہ 20 نوجوان منہ کے کینسر میں مبتلا

گٹکے اور ماوا کھانے سے یومیہ 20 نوجوان منہ کے کینسر میں متبلا ہورہے ہیں ۔جب کہ ان افراد کی خوراک کی نالی اور معدے بھی شدید متاثر ہوتا ہے ۔سرکاری اسپتالوں سے حاصل اعداد شمار کے مطابق یومیہ 20 سے زائد ایسے مریض لائے جارہے ہیں ،جو گٹکا کھانے سے کینسر کے مرض میں مبتلا ہورہے ہیں۔ گٹکے میں موجود کیمیکلز معدے کی تیزابیت ، بھوک کی کمی حتی کہ منہ اور زبان کے کینسر کا بھی سبب بن جاتے ہیں،جب کہ دانت بھی شدید متاثر ہوتے ہیں ۔ جناح اسپتال کی شعبہ ایمرجنسی کی انچارج سیمی جمالی نے ’’امت‘‘ کو بتایا کہ گٹکا کھانے سے منہ کے کینسر میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے ۔ان افراد کا پہلا منہ زیادہ نہیں کھلتا ہے اور چھالے ہوجاتے ہیں اور ایک سے دو ہفتے میں اگر ان چھالوں کا علاج نہیں ہو تو وہ چھالے کینسر میں تبدیل ہوجاتے ہیں ،جس کا واحد علاج متاثرہ حصے کو کاٹ کر جسم سے الگ کرنا ہوتا ہے ، گٹکے کے مستقل استعمال سے سستی مدہوشی اور متلی کی شکایت عام طور پر گٹکا کھانے والے افراد میں پائی جاتی ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.

x

Check Also

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک یوٹیوبر کو گرفتار کرلیا۔ ملزم مذاق کے نام پر خواتین کو مختلف باتوں پر ہراساں کرتا تھا اور گزشتہ کئی دنوں سے سوشل میڈیا پر اس پر خوب تنقید کی جارہی تھی اور پولیس سے ایکشن لینے کا مطالبہ کیا جارہا تھا۔ ملزم پر خواتین سے غیراخلاقی حرکات ، اسلحہ کے زورپرگالم گلوچ کرنے کے الزام میں مقدمہ درج کرلیاگیا ہے۔ گوجرانوالہ پولیس نے لاہور کے علاقے محمود بوٹی میں کارروائی کرکے ملزم محمد علی کو گرفتار کرلیا۔ ملزم گکھڑ منڈی کا رہائشی ہے جس نے سوشل میڈیاپر اپنا چینل بنارکھا ہے ۔ ایس پی صدر عبدالوہاب کےمطابق ملزم مزاحیہ ویڈیوز کے ذریعے شہرت حاصل کرنے کے لیے مختلف عوامی مقامات اور پارکس میں بیٹھی خواتین کو ہراساں کرکے ان کی تذلیل کرتا اور ویڈیو سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کردیتا تھا۔ پولیس نے ملزم کے خلاف مقامی شہری کی مدعیت میں مقدمہ درج کرکے کارروائی شروع کردی ہے۔

مزاحیہ ویڈیو کے نام پر خواتین کو ہراساں کرنے والا یوٹیوبر گرفتار

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک ...

%d bloggers like this: