ناک کی غلط سرجری نے پریانکا سے 7 فلمیں چھینیں

بالی وڈ اداکار پریانکا چوپڑا کو ناک کی غلط سرجری کرانے کی وجہ سے 7 فلموں سے ہاتھ دھونے پڑے۔

حال ہی میں پریانکا چوپڑا کی زندگی پر لکھی جانے والی کتاب ’پریانکا چوپڑا: دی ڈارک ہارس ‘ میں کئی رازوں سے پردے اٹھائے گئے ہیں۔

پریانکا کے بالی وڈ میں ڈیبو سے پہلے ہی کئی فلمیں ہاتھ سے نکل گئیں تھیں جس کی وجہ ناک کی سرجری تھی جب کہ سرجری کے باعث ناک کی ہڈی خراب ہوگئی ہے۔

خاتون صحافی بھارتھی ایس پرادھان کی تحریر کردہ کتاب کے مطابق پریانکا کو سب سے پہلے اداکار بوبی دیول کے مدمقابل فلم کا کردار ملا تھا اور اس فلم کو ہدایت کار مہیش منجیکر ڈائریکٹ کررہے تھے۔

فلم کی شوٹنگ کے روز اداکارہ کے منیجر نے فلم کے پروڈیوسر وجے گلانی کو میک اپ روم میں پریانکا سے ملاقات کا کہا جس پر وہ روم میں گئے تو اداکارہ کو دیکھ کر حیران رہ گئے۔

کتاب میں پروڈیوسر نے لکھا ہے کہ میں اداکارہ کو دیکھ کر حیران رہ گیا تھا اور اداکارہ سے سوال کیا جس پر انہوں نے ناک کو ٹھیک ہونے کے لیے ایک ماہ کا وقت مانگا لیکن ایک ماہ بعد بھی ان کی ناک ٹھیک نہیں ہوسکی تھی جس پر فلم کو بند کردیا گیا۔

میک اپ آرٹس نے بھی اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ خراب سرجری کی وجہ سے اداکارہ 7 سے 8 ماہ تک فلمی دنیا سے دور ہوگئی تھیں۔

اداکارہ کی بالی وڈ میں پہلی فلم ’ہیرو‘ تھی جس کے ہدایت کار انیل شرما سرجری کی وجہ سے ہی انہیں فلم سے نکالنے کی منصوبہ بندی کرچکے تھے لیکن منیجر کی درخواست پر انہیں کردار دیا گیا۔

 یاد رہے کہ پریانکا چوپڑا کا شمار بالی وڈ کی ان کامیاب ترین اداکاراؤں میں ہوتا ہے جنہوں نے اب ہالی وڈ کو بھی اپنا مسکن بنالیا ہے جہاں وہ ٹی وی سیریز کے علاوہ فلموں کی شوٹنگ میں بھی مصروف ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.

x

Check Also

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک یوٹیوبر کو گرفتار کرلیا۔ ملزم مذاق کے نام پر خواتین کو مختلف باتوں پر ہراساں کرتا تھا اور گزشتہ کئی دنوں سے سوشل میڈیا پر اس پر خوب تنقید کی جارہی تھی اور پولیس سے ایکشن لینے کا مطالبہ کیا جارہا تھا۔ ملزم پر خواتین سے غیراخلاقی حرکات ، اسلحہ کے زورپرگالم گلوچ کرنے کے الزام میں مقدمہ درج کرلیاگیا ہے۔ گوجرانوالہ پولیس نے لاہور کے علاقے محمود بوٹی میں کارروائی کرکے ملزم محمد علی کو گرفتار کرلیا۔ ملزم گکھڑ منڈی کا رہائشی ہے جس نے سوشل میڈیاپر اپنا چینل بنارکھا ہے ۔ ایس پی صدر عبدالوہاب کےمطابق ملزم مزاحیہ ویڈیوز کے ذریعے شہرت حاصل کرنے کے لیے مختلف عوامی مقامات اور پارکس میں بیٹھی خواتین کو ہراساں کرکے ان کی تذلیل کرتا اور ویڈیو سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کردیتا تھا۔ پولیس نے ملزم کے خلاف مقامی شہری کی مدعیت میں مقدمہ درج کرکے کارروائی شروع کردی ہے۔

مزاحیہ ویڈیو کے نام پر خواتین کو ہراساں کرنے والا یوٹیوبر گرفتار

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک ...

%d bloggers like this: