سیاست میں فوج کا کردار نظرآیا تو سمجھاؤں گا

سابق صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ جنر ل قمر باجوہ پہلے جنرل ہیں جنہوں نے محسوس کیا کہ افغان بارڈر پر خاردار تار لگانا پڑے گی اور انٹری روکنا پڑے گی۔ اگر مجھے سیاست میں فوج کا کردار نظر آیا تو میں نوازشریف کی طرح محاذ آرائی کرنے کی بجائے اُنہیں ایجوکیٹ کروں گا،قدم بڑھاؤ نوازشریف ہم تمہارے ساتھ نہیں، تحریک انصاف کو پارٹی نہیں مانتا، پیپلزپارٹی میں آنے اور جانیوالوں پر کوئی ٹیکس نہیں ہے، ایسا دِل نہیں رکھتا جو ٹوٹ جائے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جیو نیوز کے پروگرام ’’ جرگہ‘‘ میں میزبان سلیم صافی کو انٹرویو دیتے ہوئے کیا، آصف زرداری کا یہ انٹرویو آپ آج رات 10 بجکر 5 منٹ پر جیو نیوز پر دیکھ سکیں گے، پروگرام کے میزبان سلیم صافی کے سوال موجودہ ملٹری قیادت کے رول کو آپ کس طرح دیکھتے ہیں کیونکہ جنرل راحیل شریف کے بارے میں آپ کے critical views تھے کا جواب دیتے ہوئے آصف زرداری نے کہا کہ میں سمجھتا ہوں موجودہ آرمی چیف ماضی کے جنرلز کے مقابلے میں کامیاب رہے ہیں حالانکہ

بہت سے جنرلز کو ان سے زیادہ ہوشیا رسمجھا جاتا تھا، یہ پہلے چیف ہیں جنہوں نے افغانستان بارڈر پر خاردار تار لگانے کا احساس کیا اور ان کی انٹری روکنے کی بات کی، ملٹری اسٹیلشمنٹ کی پالیسیاں ماضی والی ہیں تو کیا جنرل قمر باجوہ کی پالیسیوں کو سپورٹ کر تے ہیں؟ کا جواب دیتے ہوئے آصف زرداری نے کہا کہ یہ کچھ لوگ یا آپ کہہ رہے ہیںیا نواز شریف ، ان کا انفارمیشن ٹول، ان کے ٹوئٹر اکائونٹس کہہ رہے ہیں، مجھے اگر ان کا رول نظر بھی آئے گا تو میں محاذ آرائی کی جگہ educateکرنا چاہوں گا۔ آصف علی زرداری کا پاکستان کی بدلتی ہوئی سیاسی صورتحال اور آئندہ انتخابات کے حوالے سے کہنا تھا کہ تحریک انصاف کو کچھ لوگ پارٹی مانتے ہیں لیکن ہم نہیں مانتے۔اگر لوگ پیپلزپارٹی چھوڑ کر پی ٹی آئی میں جا رہے ہیں تو جس طرح پیپلزپارٹی میں آنے والوں پر کوئی ٹیکس نہیں ہے اُسی طرح جانے والوں پر بھی کوئی ٹیکس نہیں ہے۔ جب اُن سے پوچھا گیا آپ کا دِل کس کے رویے نے توڑا ہے تو اُن کا جواب تھا میں ایسا دِل رکھتا ہی نہیں جو ٹوٹ جائے۔ سینیٹ انتخابات میں پیسہ چلنے کی خبروں پر بات کرتے ہوئے اُن کا کہنا تھا کہ میں نے اُس الیکشن میں اپنا اثر و رسوخ استعمال کیا ہے۔ سینیٹ چیئرمین ”صادق سنجرانی “ ہیں کیا یہ رضا ربانی کے ساتھ زیادتی نہیں؟۔ اس سوال کے جواب میں اُن کا کہنا تھا کہ وہ ”صادق“ ہیں لہٰذا اُن کی ضرورت ہے۔ جب اُنہیں بتایا گیا کہ سابق وزیراعظم نوازشریف کی جانب سے نئے سوشل کونٹریکٹ کی باتیں سامنے آئی ہیں تو جوابا آصف زرداری کا کہنا تھا ”قدم بڑھاؤ نوازشریف ہم تمہارے ساتھ نہیں ہیں“۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.

x

Check Also

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک یوٹیوبر کو گرفتار کرلیا۔ ملزم مذاق کے نام پر خواتین کو مختلف باتوں پر ہراساں کرتا تھا اور گزشتہ کئی دنوں سے سوشل میڈیا پر اس پر خوب تنقید کی جارہی تھی اور پولیس سے ایکشن لینے کا مطالبہ کیا جارہا تھا۔ ملزم پر خواتین سے غیراخلاقی حرکات ، اسلحہ کے زورپرگالم گلوچ کرنے کے الزام میں مقدمہ درج کرلیاگیا ہے۔ گوجرانوالہ پولیس نے لاہور کے علاقے محمود بوٹی میں کارروائی کرکے ملزم محمد علی کو گرفتار کرلیا۔ ملزم گکھڑ منڈی کا رہائشی ہے جس نے سوشل میڈیاپر اپنا چینل بنارکھا ہے ۔ ایس پی صدر عبدالوہاب کےمطابق ملزم مزاحیہ ویڈیوز کے ذریعے شہرت حاصل کرنے کے لیے مختلف عوامی مقامات اور پارکس میں بیٹھی خواتین کو ہراساں کرکے ان کی تذلیل کرتا اور ویڈیو سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کردیتا تھا۔ پولیس نے ملزم کے خلاف مقامی شہری کی مدعیت میں مقدمہ درج کرکے کارروائی شروع کردی ہے۔

مزاحیہ ویڈیو کے نام پر خواتین کو ہراساں کرنے والا یوٹیوبر گرفتار

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک ...

%d bloggers like this: