شیمپو کا انوکھا اشتہار

شیمپو اور ہیئر کلرکا اشتہار ہو اور نرم و ملائم چمکدار بال نہ دکھائے جائیں ایسا ممکن ہی نہیں، لیکن روایت کے برعکس برطانوی مسلمان ماڈل اور یوٹیوب بلاگر امینہ خان نے شیمپو کا اشتہار حجاب کے ساتھ شوٹ کرایا ہے، جس کی ویڈیو انسٹا گرام پر شیئر بھی کی ہے۔
فرانس کے معروف کاسمیٹکس برانڈ نے ہیئرکلر اور شیمپو کے اشتہار کے لئے باحجاب ماڈل کا انتخاب کیا اور ماڈل نے بغیر بال دکھائے ہیئر کلر کی تشہیر کی۔
برطانوی مسلمان ماڈل اور یوٹیوب بلاگر امینہ خان نے اپنے اشتہارکی ویڈیو انسٹا گرام پر شیئر کی جس میں خود امینہ کے بال تو حجاب میں ڈھکے ہیں تاہم دوسری دو ماڈلز کے بال کھلے ہوئے ہیں۔
امینہ خان نے جریدے’ ووگ ‘یو کے سے گفتگو میں کہا ’ کتنے برانڈز اس طرح کا دلیرانہ قدم اٹھانے کی جرات رکھتے ہیں؟ بہت زیادہ نہیں۔ یہ اشتہار گیم چینجر ہے۔
ان کا کہنا تھا کہ کمپنی نے ایک ایسی لڑکی کو اپنے ہیئر پروڈکٹ کی اشتہاری مہم میں شامل کیا جس کے بال چھپے ہوئے ہیں۔ اس کا مطلب وہ مختلف چیزوں اور نظریے کو بھی اہمیت دیتے ہیں۔ یہ پہلا موقع ہے کہ خالصتا ًبالوں سے متعلق پروڈکٹ کے اشتہار میں بالوں کو ہی ظاہر نہیں کیا گیا۔
امینہ خان کے اس اشتہارنے بھرپور توجہ حاصل کی ۔ امریکی نیوز چینل سی این این کا کہنا ہے کہ بالوں کی پروڈکٹس کے لئے باحجاب ماڈل لے کرنئی تاریخ رقم کی گئی ہے۔
امینہ خان نے 20 سال کی عمر سے حجاب پہننے کے ساتھ ساتھ ماڈلنگ بھی شروع کی، وہ نہ صرف برطانیہ بلکہ یورپی اور کئی مسلم ممالک کے مختلف برانڈز کے اشتہاروں میں کام کر چکی ہیں۔
کمپنی کا کہنا ہے کہ اس اشتہار کے ذریعے مسلمان خواتین کو پیغام دینا چاہتے ہیں کہ بالوں کی دیکھ بھال اور خوبصورتی کا حجاب سے کوئی تعلق نہیں، باحجاب خواتین بھی بالوں کو حسین بناسکتی ہیں، جس طرح دیگر خواتین کھلے بالوں کو بناتی ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.

x

Check Also

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک یوٹیوبر کو گرفتار کرلیا۔ ملزم مذاق کے نام پر خواتین کو مختلف باتوں پر ہراساں کرتا تھا اور گزشتہ کئی دنوں سے سوشل میڈیا پر اس پر خوب تنقید کی جارہی تھی اور پولیس سے ایکشن لینے کا مطالبہ کیا جارہا تھا۔ ملزم پر خواتین سے غیراخلاقی حرکات ، اسلحہ کے زورپرگالم گلوچ کرنے کے الزام میں مقدمہ درج کرلیاگیا ہے۔ گوجرانوالہ پولیس نے لاہور کے علاقے محمود بوٹی میں کارروائی کرکے ملزم محمد علی کو گرفتار کرلیا۔ ملزم گکھڑ منڈی کا رہائشی ہے جس نے سوشل میڈیاپر اپنا چینل بنارکھا ہے ۔ ایس پی صدر عبدالوہاب کےمطابق ملزم مزاحیہ ویڈیوز کے ذریعے شہرت حاصل کرنے کے لیے مختلف عوامی مقامات اور پارکس میں بیٹھی خواتین کو ہراساں کرکے ان کی تذلیل کرتا اور ویڈیو سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کردیتا تھا۔ پولیس نے ملزم کے خلاف مقامی شہری کی مدعیت میں مقدمہ درج کرکے کارروائی شروع کردی ہے۔

مزاحیہ ویڈیو کے نام پر خواتین کو ہراساں کرنے والا یوٹیوبر گرفتار

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک ...

%d bloggers like this: