رجنی کانت، سیاست سے پہلے، سیاسی پنڈتوں کے گھیرے میں

رجنی کانت علاقائی فلموں کے ’دیوتا‘۔۔ اور ہندی فلموں کے سپراسٹار ہیں۔۔۔سپراسٹار بھی ایسے کہ دیکھتے ہی دیکھتے سب کو اپنے سحر میں جکڑلیں۔ انہوں نے سیاست میں آنے کا اعلان کیا کیا گویا ایک بحث چھیڑ دی۔ کچھ ’سیاسی پنڈت‘ تو راتوں رات میدان میں اتر آئے اور رجنی کانت پر کردی ۔۔سوالات کا بوچھاڑ۔

 کچھ کا کہنا تھا اس وقت ان کی عمر 67سال ہے اور وہ 2021کے انتخابات لڑنے کی بات کررہے ہیں، اس وقت ان کی عمر 70سال ہوگی۔ تو کیا وہ 70سالہ سنیاسی بابا بننے کے بعد تامل ناڈو کے وزیراعلیٰ کی حیثیت سے ریاست کی باگ دوڑ سنبھالیں گے؟

(اسکرین پلے : عوامی تقریر کا کوئی فلمی منظر ۔۔یا بوڑھے کا کردار)

سیاسی پنڈتوں کا ایک اور سوال ۔۔۔جو اس سے بھی زیادہ اہم ہے ۔ اور وہ یہ کہ ۔۔۔چونکہ ان کے فینز فولورز کی تعداد کروڑوں میں ہے لہذا وہ الیکشن تو شاید جیت جائیں لیکن کیا سیاست میں بھی وہ اتنے ہی کامیاب ہوسکیں گے جتنے کہ شوبزنس میں ہیں ؟ رجنی کانت سے پہلے تامل فلموں کے ہی ایک اور سپراسٹار کمل حسن نے بھی سیاست میں آنے کا اعلان کیا تھا لیکن اس اعلان کو وہ آج تک عملی طور پر پورا کرنے میں کامیاب نہیں ہوسکے ۔

کمل حسن اوربالی ووڈ کی بگ بی ۔۔یعنی ۔۔امیتابھ نےان کے اعلان کا خیر مقدم کیا ہے اور خوشی کااظہار کرتے ہوئے ان کا ساتھ دینے کا اعلان بھی کیا ہے ۔ لیکن پھر ایک اورسوال اٹھتا ہے ۔۔۔۔وہ یہ کہ۔۔۔ اپنے دور کی کامیاب ترین تامل فلموں کی ہیروئن جے للیتا

جو کئی سال تک وزیراعلیٰ بھی رہیں اور آج بھی لاکھوں دلوں میں رہتی ہیں، کیا رجنی کانت بھی سیاست دان بن کر اتنے ہی عوامی اور ہردل عزیز ثابت ہوسکیں گے ؟

ان سوالات کے حوالے سے رجنی کانت کو ہمارا مشورہ یہ ہے کہ سوالات سے نہ گھبرائیں ۔۔کیوں کہ سیاست میں سب کچھ ہوسکتا ہے ۔۔یہاں حرف آخر کچھ بھی نہیں ۔۔بس آپ کوشش جاری رکھئے ۔۔۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.

x

Check Also

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک یوٹیوبر کو گرفتار کرلیا۔ ملزم مذاق کے نام پر خواتین کو مختلف باتوں پر ہراساں کرتا تھا اور گزشتہ کئی دنوں سے سوشل میڈیا پر اس پر خوب تنقید کی جارہی تھی اور پولیس سے ایکشن لینے کا مطالبہ کیا جارہا تھا۔ ملزم پر خواتین سے غیراخلاقی حرکات ، اسلحہ کے زورپرگالم گلوچ کرنے کے الزام میں مقدمہ درج کرلیاگیا ہے۔ گوجرانوالہ پولیس نے لاہور کے علاقے محمود بوٹی میں کارروائی کرکے ملزم محمد علی کو گرفتار کرلیا۔ ملزم گکھڑ منڈی کا رہائشی ہے جس نے سوشل میڈیاپر اپنا چینل بنارکھا ہے ۔ ایس پی صدر عبدالوہاب کےمطابق ملزم مزاحیہ ویڈیوز کے ذریعے شہرت حاصل کرنے کے لیے مختلف عوامی مقامات اور پارکس میں بیٹھی خواتین کو ہراساں کرکے ان کی تذلیل کرتا اور ویڈیو سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کردیتا تھا۔ پولیس نے ملزم کے خلاف مقامی شہری کی مدعیت میں مقدمہ درج کرکے کارروائی شروع کردی ہے۔

مزاحیہ ویڈیو کے نام پر خواتین کو ہراساں کرنے والا یوٹیوبر گرفتار

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک ...

%d bloggers like this: