Old banknotes will be old from 1st Dec

State Bank of Pakistan (SBP) on Wednesday said that the old design banknotes would cease to be legal tender with effect from December 1, 2016.

“It has now been decided to phase out all remaining old design banknotes of Rs 10, 50, 100 and 1000”, statement of SBP said.

The SBP said that the Rs 5 banknote and the old design Rs 500 banknote have already been demonetized.

It is worth mentioning that the State Bank of Pakistan issued a new design banknote series which started with the issuance of Rs 20 denomination banknote in 2005 to improve the security, durability and aesthetic quality of banknotes.

The process of issuance of complete series of new design banknotes comprising eight denominations (Rs 5, 10, 20, 50, 100, 500, 1000 and 5000) was completed in 2008.

The commercial/ microfinance banks would accept the old design banknotes of Rs 10, 50, 100 and 1000 and exchange the same with the new design banknotes and coins of all denominations up to November 30, 2016 only.

However, SBP BSC field offices would continue to accept the old design banknotes of Rs 10, 50, 100 and 1000 from general public up to December 31, 2021.

The last day to exchange all old design banknotes from banks is November 30, 2016.

All old design banknotes shall cease to be legal tender on December 1, 2016 while last day to exchange all such banknotes from SBP BSC field offices is December 31, 2021, the SBP statement said.

Leave a Reply

Your email address will not be published.

x

Check Also

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک یوٹیوبر کو گرفتار کرلیا۔ ملزم مذاق کے نام پر خواتین کو مختلف باتوں پر ہراساں کرتا تھا اور گزشتہ کئی دنوں سے سوشل میڈیا پر اس پر خوب تنقید کی جارہی تھی اور پولیس سے ایکشن لینے کا مطالبہ کیا جارہا تھا۔ ملزم پر خواتین سے غیراخلاقی حرکات ، اسلحہ کے زورپرگالم گلوچ کرنے کے الزام میں مقدمہ درج کرلیاگیا ہے۔ گوجرانوالہ پولیس نے لاہور کے علاقے محمود بوٹی میں کارروائی کرکے ملزم محمد علی کو گرفتار کرلیا۔ ملزم گکھڑ منڈی کا رہائشی ہے جس نے سوشل میڈیاپر اپنا چینل بنارکھا ہے ۔ ایس پی صدر عبدالوہاب کےمطابق ملزم مزاحیہ ویڈیوز کے ذریعے شہرت حاصل کرنے کے لیے مختلف عوامی مقامات اور پارکس میں بیٹھی خواتین کو ہراساں کرکے ان کی تذلیل کرتا اور ویڈیو سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کردیتا تھا۔ پولیس نے ملزم کے خلاف مقامی شہری کی مدعیت میں مقدمہ درج کرکے کارروائی شروع کردی ہے۔

مزاحیہ ویڈیو کے نام پر خواتین کو ہراساں کرنے والا یوٹیوبر گرفتار

گوجرانوالہ پولیس نےبغیراجازت عوامی مقامات پر ویڈیوز بناکر خواتین کرہراساں کرنے کے الزام میں ایک ...

%d bloggers like this: