گوگل لینس اب اسٹینڈالون اپپ کے طور پر دستیاب

گوگل لینس اب اسٹینڈالون اپپ کے طور پر دستیاب

اکثر اوقات تصویر لینے کے بعد زوم کرکے دیکھنے سے عکس دھندلا ہوجاتا ہے، جس کی وجہ سے وہ جگہ یا نام درست طور پر دکھائی نہیں دے رہا ہوتا، لیکن گوگل لینس نے اس مشکل سے چھٹکارہ دے دیا ہے۔

یہ گوگل لینس پلے اسٹور پر دستیاب ہیں، جس کے لیے اسٹینڈالون ایپ ڈاؤن لوڈ کرنا ضروری ہے۔

گوگل لینس ایک ذہین کیمرہ ہے، جس کی مدد سے کسی بھی فن پارے اور جگہ کی باریکی کو جانچا جاسکتا اور معلومات حاصل کی جا سکتی ہیں۔

علاوہ ازیں اس فیچر کی مدد سے بار کوڈز اور ٹیکس کو اسکین کرنے کی سہولت بھی دستیاب ہے یا پھر صارفین چاہیں تو اس میں کوئی چیز کاپی پیسٹ بھی کرسکتے ہیں اور کیلنڈر میں کوئی اہم ایونٹ بھی محفوظ کرسکتے ہیں۔

یعنی اس گوگل لینس کے ذریعے اُن تمام چیزوں کی معلومات مل سکتی ہیں جو واضح طور پر نہ دیکھی جاسکتی ہوں۔

ٹیکنالوجی ویب سائٹ میش ایبل کے مطابق اسٹینڈالون ایپ کے فیچرز جلد ہی اینـڈرائیڈ کے تمام صارفین بھی استعمال کر سکیں گے لیکن پلے اسٹور کے مطابق یہ ڈیوائس میں صرف مارش میلو کے ساتھ کام کرے گا۔

تاہم ایپ کے متعارف ہوتے ہی کچھ صارفین کی جانب سے شکایت کی گئی کہ یہ گلیکسی ایس7 ایج، اوریو اور موٹرولا جی 4 میں کام نہیں کر رہی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

x

Check Also

ڈیٹا چوری سکینڈل پر بانی فیس بک کی یورپی یونین میں پیشی

ڈیٹا چوری سکینڈل پر بانی فیس بک کی یورپی یونین میں پیشی

ڈیٹا چوری پر فیس بک بانی کو یورپی یونین میں بھی پیشی دینی پڑگئی، مارک ...